Sunday, May 26
Shadow

غزل/ شازیہ عالم شازی

شازیہ عالم شازی

کب تک مجھے ستاؤ گے کب تک  رلاؤ گے 

میں کھو گئی تو کس سے محبت جتاؤ گے 

 چھوٹی سی  ایک بات  پہ ترک تعلقات!

 میں تو سمجھ رہی  تھی مجھے تم مناؤ گے

 وہ بھی تمہاری سوچ  پہ ہو جائے  گا فدا 

تم جس کو میرے پیار کی غزلیں سناؤ گے 

میری  وفا  کا مل نہ سکے گا جو  آ ستاں 

پھر کس کے در پہ جاؤ گے اور سر جھکاؤ گے 

جب میں نہیں رہوں گی تمہارے قریب پھر 

کس  سے  وفا  جتاؤ  گے کس کو ستاؤ گے 

بھولے گی نہیں تم کو کبھی مان لو یقین 

تم  شازیہ  عالم  کو اگر بھول جاؤ  گے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

×

Send a message to us on WhatsApp

× Contact