Tuesday, May 21
Shadow

پاکستان میں دیہاتی زندگی روایت اور سادگی کا حسین امتزاج/ دانیال حسن چغتائی

دانیال حسن چغتائی

 ہرے بھرے مناظر کے درمیان بسے ہوئے، دیہات سکون کا وہ منبع ہیں ، جو شہری زندگی کی رفتار سے الگ نظر آتے ہیں۔ یہاں، وقت کی رفتار تھمتی دکھائی دیتی ہے، فطرت اور ثقافتی ورثہ یہاں جوبن پر نظر آتا ہے۔ 
گاؤں میں دن کا آغاز اس وقت ہوتا ہے جب صبح کی پہلی کرنیں آسمان کو سونے اور نارنجی رنگوں سے مزین کر دیتی ہیں۔ مرد کھیتوں کی طرف جانے کے لیے اٹھتے ہیں، صبح کی ہوا کی خاموشی میں ان کے قدموں کی گونج ہوتی ہے۔ خواتین گھروں میں کھانا تیار کرتی ہیں، تازہ پکی ہوئی روٹی کی خوشبو گاؤں کی گلیوں میں بھر جاتی ہے۔
 پاکستانی دیہاتوں میں برادری کے رشتے گہرے ہوتے ہیں۔ پڑوسی چائے کے لیے جمع ہوتے ہیں، خوشبودار چائے پر گھونٹ لیتے ہوئے کہانیاں اور قہقہے گونجتے ہیں۔ بزرگ حکمت اور رہنمائی کا منبع سمجھے جاتے ہیں ، ان کے الفاظ نسلوں کے لیے تجربے کا نچوڑ رکھتے ہیں۔ دیہاتی ایک آواز پر اکٹھے ہو جاتے ہیں۔ یہ اجتماعات اس مشترکہ ورثے کی یاد دہانی کا کام کرتے ہیں جو انہیں روایات کے ساتھ جوڑے رکھتے ہیں،۔
 پاکستان میں دیہاتی زندگی میں سادگی کا عنصر نمایاں ہے، یہ جدید معاشرے کی پیچیدگیوں کے بالکل برعکس ہے۔ یہاں، مادی اثاثے اہمیت نہیں رکھتے اور خوشی غمی میں سب زندگی کی لذتیں کشید کرتے دکھائی دیتے ہیں–
گاؤں میں خاندان کی گرمجوشی، فطرت کی خوبصورتی، اور برادری کی ہمدردی سب کا احساس یکساں طور پر ملتا ہے، جہاں افراد کی اجتماعی بہبود میں سب کے تعاون کی قدر کی جاتی ہے۔ بلاشبہ گاؤں ایک ایسی جگہ ہے جہاں روایات کو ترجیح دی جاتی ہے، جہاں اقدار نظر آتی ہیں اور جہاں معاشرے کی حقیقی روح پروان چڑھتی نظر آتی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

×

Send a message to us on WhatsApp

× Contact